سیب کے سرکے کے حیرت انگیز فوائد بہت سی موزی بیماریوں سے شفاء

سیب کا سرکا ہمارے جسم کی کارکردگی میں کافی مفید ثابت ہوا ہے۔ آج کل سیب کے سرکے پر بہت معلومات کی جا رہی ہیں۔ سیب کا سرکا ہمارے جسم میں موجود کولیسٹرول کو بیلنس رکھتا ہے ساتھ ہی ساتھ ہمارے خون کی روانی کو بہتر بناتا ہے اور پیٹ کی چربی کو کافی حد تک کم کرتا ہے۔ اسی لیے اسکو بہت پسند کیا جاتا ہے وزن کم کرنے کے لیے اور مختلف بیماریوں میں بھی استعمال کیا جاتا ہے۔

آج ہم اس بارے میں ہی بات کریں گے کہ سیب کا سرکا کیسے استعمال کیا جائے اور یہ کن لوگوں کو فائدہ پہنچاسکتا ہے۔ اور سیب کے سرکے کو استعمال کرنے کا صحیح وقت کونسا ہوتا ہے اور دن میں کتنی مقدار میں استعمال کرنا چاہیے۔

جدید تحقیقات یہ بتاتی ہیں کہ سیب کا سرکا ہمارے جسم میں موجود انسولین کو متوازن کرتا ہے جس سے ہمیں شوگر ہونے کا خطرہ کافی حد تک کم ہو جاتا ہے۔ اور ہمارے خون کہ صاف کر کے ہمیں شوگر جیسی بیماریوں سے محفوظ رکھتا ہے۔ ایک تحقیق میں یہ بات آتی ہے کہ اگر آپ 3مہینے تک سیب کا سرکا اپنی روزمرہ کی غذا میں شامل کرتے ہیں تو آپکے جسم میں موجود کولیسٹرول کافی حد تک کم ہو جاتا ہے۔ اس طرح سے آپ کی پیٹ کی چربی کافی حد تک کنٹرول ہو جاتی ہے۔ اور آپ موٹاپے جیسی بیماری سے بھی کافی حد تک محفوظ رہ سکتے ہیں ساتھ ہی ساتھ سیب کا سرکا آپکے جسم میں قوتِ مدافعت کو بھی بڑھاتا ہے۔

سیب کا سرکا ہمیں صحیح طریقے سے فائدے تب پہنچا سکتا ہے جب ہم بغیر فلٹر ہوا سیب کا سرکا استعمال کریں۔ اس کی پہچان یہ ہے کہ اس میں جالے نما ایک چیز صاف نظر آرہی ہوتی ہے اور یہ بازار میں عام مل جاتا ہے۔

ایسے تمام مریض جن میں خون کے مسائل ہیں یا کولیسٹرول بڑھا ہوا ہے بلڈ پریشر نارمل نہیں ہے یا شوگر میں مبتلا ہیں ایسے تمام لوگ سیب کے سرکے سے مستفید ہو سکتے ہیں۔ بہت سارے لوگ یہ بات بھول جاتے ہیں کہ خالی سیب کا سرکا صرف استعمال کرنے سے ہی مریض پوری طرح مستفید ہوجائے گا۔ سیب کے سرکے کے ساتھ ساتھ مریض کو اپنی غذا کا پورا پورا خیال رکھنا چاہیے۔ ایسے مریض کو اپنی غذا میں سے چینی اور گھی جیسی چیزوں کہ نکال دینا ہوگا تاکہ وہ بہتر نتائج حاصل کرسکیں۔

ایسے مریضوں کہ اپنی ڈائیٹ میں پروٹین کا استعمال زیادہ سے زیادہ کرنا چاہیے اور اچھی غذا لینی چاہیے۔

بہت سارے لوگ ایسا خیال رکھتے ہیں کہ وہ جتنا مرضی کھا لیں۔ اپنے کھانے کے بعد ایک گرین ٹی کا کپ پی کے وہ سارا کھانا ہضم کرلیں گے جبکہ ایسا نہیں ہوتا آپ جب تک اپنی ڈائیٹ اچھی نہیں کریں گے آپ 10کپ بھی گرین ٹی پی لیں کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔ یہ چیزیں تب ہی فائدہ پہنچائیں گی جب ہم اپنی غزا کو بہتر بنائیں گے اور بھوک رکھ کے کھائیں گے۔ اس طرح کرنے سے ہمارے جسم میں قوت مدافعت بھی بہتر ہوجائے گی۔

اب سوال یہ ہے کہ سیب کا سرکا استعمال کب کیا جائے۔ سیب کے سرکے کو استعمال کرنے کا سب سے صحیح 2وقت ہیں۔ ایک وقت کچھ بھی کھانے سے پہلے سیب کا سرکا استعمال کرلیں اس سے آپ کا کھانا بھی بہت اچھے طریقے سے ہضم ہوجاتا ہے اور غذایت صحیح طور سے ہمارے جسم کے خلیوں تک پہنچ جاتی ہے۔ اور دوسرا وقت رات کو سونے سے پہلے کیونکہ اس طرح آپکے جسم میں کولیسٹرول کافی حد تک بیلنس ہوجاتا ہے اور انسان شوگر اور بلڈ پریشر جیسی کئی خطرناک بیماریوں سے محفوز رہتا ہے۔

آپ نے صرف اس چیز کا خیال رکھنا ہے کہ جس وقت آپ سیب کا سرکا لیں اس وقت کہیں آپ کے سینے میں جلن تو نہیں محسوس ہورہی۔ اگر آپ کو سینے میں جلن محسوس ہورہی ہو تو آپ اس وقت سیب کے سرکے کا استعمال ترک کردیں اور کسی اور وقت سیب کا سرکا استعمال کریں۔ یہ کہا جاتا ہے کہ 2ٹیبل سپون سیب کا سرکا کافی مفید ہے اس سے زیادہ ہمارے جسم کے لیے اچھا نہیں ہے۔

جہاں ایک چیز آپ کو فائدہ دے رہی ہوتی ہے وہاں اسکے نقصانات بھی ہیں اگر سیب کے سرکے کی وجہ سے آپ کو سینے میں جلن اور تیزابیت ہو رہی ہے تو اس کو آپ دن میں 2 وقت کی بجائے ایک وقت لیں اور پانی میں حل کر کے لیں اس سے اسکی تاثیر کم ہوجاتی ہے اور آپ کے معدے میں جلن بھی نہیں رہتی۔

Spread the love
کیٹاگری میں : صحت

اپنا تبصرہ بھیجیں