کھانسی اور بلغم کے لیئے شہد کی پٹّی ۔۔ جانیں کھانسی اور پھیپڑوں کی تکلیف کو ٹھیک کرنے کا یہ انوکھا طریقہ کیا ہے؟

شہد ایک حقیقی سپر فوڈ ہے، جو ہزاروں سالوں سے روایتی قدرتی علاج کے طور پر استعمال ہوتا آرہا ہے۔ اس کا استعمال زخموں، جلنے، السر، معدے کی تکلیف کے ساتھ ساتھ کھانسی اور گلے کی سوزش کے علاج کے لیے بھی کیا گیا ہے۔

نیشنل انسٹی ٹیوٹ فار ہیلتھ اینڈ کیئر ایکسی لینس اور پبلک ہیلتھ انگلینڈ کے رہنما خطوط، کھانسی کے لیے شہد کا استعمال کرنے کا مشورہ دیتے ہیں اور اسے بہترین دستیاب سائنسی شواہد کو دیکھنے کے بعد تیار کیا گیا ہے۔

شواہد سے پتہ چلتا ہے کہ شہد اوپری سانس کی نالی کے انفیکشن کی وجہ سے ہونے والی شدید کھانسی کی علامات کو مؤثر طریقے سے دور کرتا ہے، اور مسلسل کھانسی اور ان علامات کی شدت کو کم کرتا ہے۔

ہدایت کا اطلاق بالغوں اور 5 سال سے زیادہ عمر کے بچوں پر ہوتا ہے، کیونکہ شہد 1 سال سے کم عمر کے بچوں کے لیے محفوظ نہیں ہے۔

درج ذیل قدرتی علاج آپ کو بلغم اور کھانسی کے علاج میں مدد کرے گا۔

شہد کی پٹی بنانے کا طریقہ:
خالص شہد

ناریل کا تیل

ناریل کا آٹا

جالی، نیپکن یا کاغذ کا تولیہ

چپکنے والی میڈیکل ٹیپ

پنیر کا کپڑا (زخم پر لگانے والی پٹی)

شہد اور ناریل کے آٹے کو ملا کر پیسٹ بنائیں اور اس بات کو یقینی بنائیں کہ یہ اب چپچپا نہیں ہے۔ پھر ناریل کا تیل شامل کریں، اگر ضرورت ہو تو مزید آٹا شامل کریں، اور پھر اس پیسٹ کو نیپکن (رومال)، جالی وغیرہ پر بچھا دیں۔ پھر اسے پنیر کے کپڑے میں لپیٹیں، اور سینے پر رکھیں۔ اور اوپر سے میڈیکل ٹیپ چپکا دیں، اور اپنی قمیض پہن لیں۔

اسے بچوں میں سونے سے چند گھنٹے پہلے لگائیں، اور سونے سے پہلے اتار لیں۔ اس کے علاوہ، بچے کے بازو پر تھوڑی مقدار میں پیسٹ لگائیں اور لپیٹنے سے پہلے دیکھیں کہ کیا اس سے کوئی الرجی پیدا ہوتی ہے۔

بالغ افراد پوری رات لپیٹ کر چھوڑ سکتے ہیں۔ یاد رکھیں کہ شہد میں گرمی کا اثر ہوتا ہے، اس لیے پسینہ آنا اسکی ایک عام علامت ہے۔ پہلے علاج کے بعد ہی آپ کو سکون ملے گا۔

Spread the love

اپنا تبصرہ بھیجیں