ایسا کرو اللہ تمہارے دماغ سے شیطان نکال دے گا

یہ سمجھنا ضروری ہے کہ شیطان ہم تک کیسے پہنچتا ہے یقیناً شیطان کا اصل حربہ ویسٹ ویسٹر ہے اور وہ سرگوشی کرنا ہے اور شیطان کا ویسٹ ویسٹر ہمارے دلوں میں ایسا خیال ڈالنا ہے جو نہیں ہونا چاہیے اور یہ بہت ہی بری بات ہے۔ تدبیر سوچو ہمارے دل پاک ہیں ہم اللہ کی نافرمانی نہیں کرنا چاہتے

ہمارے دل اللہ کی عبادت کے لیے بنائے گئے ہیں ہم نماز پڑھنا چاہتے ہیں ہم دینداری سے لطف اندوز ہونا چاہتے ہیں لیکن شیطان آتا ہے اور دل میں کچھ ڈال دیتا ہے اور وہ ہمیں سوچنے پر مجبور کرتا ہے۔ ایک ایسا کام جسے کرنے کے بارے میں ہم نے کبھی سوچا بھی نہیں اور وہ ہمیں گناہ کرنے پر مجبور کرنے کی کوشش کرتا رہتا ہے کہ کتنی بری بات ہے کہ ہم گناہ کرنا بھی نہیں چاہتے

اور میرے پیارے بھائیو اور بہنو جب کوئی برا خیال آتا ہے تو عموماً ایسا ہوتا ہے۔ اور یہ سوچ ہمیں حیران بھی کر دیتی ہے کہ یہ کہاں سے آیا میں یہ کیسے سوچ رہا ہوں آپ خود بحث کر رہے ہیں آپ جو سوچ رہے ہیں اس پر کھڑے ہیں لیکن آپ کو لگتا ہے کہ آپ سوچ رہے ہیں یہ آپ نہیں سوچ رہے یہ شیطان ہے

جس نے پھینکا یہ آپ میں ہے اور یہی وجہ ہے کہ شیطان کا وجود دراصل ہمیں یہ احساس دلاتا ہے کہ الحمدللہ ہمارے دل انشاء اللہ عام طور پر پاکیزہ ہیں اور اس لیے ہم شیطان کو اپنی برائی کا ذمہ دار ٹھہراتے ہیں کیا یہ اللہ کی طرف سے حکمت نہیں ہے جب یوسف علیہ السلام نے کیا ہوا ہوا اور وہ بچ گیا آخر اس نے کیا کہا کہ یہ شیطان تھا جس نے میرے بھائیوں کو کرایا انہوں نے کیا کیا ایک خوبصورت حکمت اس بات کا ذکر کرتی ہے کہ ہم شیطان کو برائی کا ذمہ دار ٹھہراتے ہیں یہ میرا بھائی نہیں جس نے یہ کیا شیطان نے اس سے یہ کیا یہ کیا خوبصورت حربہ ہے

کہ آپ شیطان پر الزام لگاتے ہیں کیونکہ وہ الزام کے لائق ہے وہ وہی ہے جس نے ایسا کیا تو آپ کا غصہ آپ کے مسلمان بھائی پر نہیں ہے آپ کا غصہ کسی ایسے شخص پر نہیں ہے جس نے کچھ کیا یہ شیطان پر ہے جس نے ان کو وسوسہ دیا جس نے مغرب واسا کیا اور اس لیے آپ کے دل اپنے مسلمان بھائیوں اور بہنوں کے لیے پاکیزہ ہو سکتے ہیں اور آپ شیطان کو مورد الزام ٹھہرا سکتے ہیں اوہ شیطان نے ان کو یہ کہا کہ شیطان نے انہیں پھسلایا شیطان نے ان کی غیبت کی ورنہ وہ ایسا نہیں کرتے اور حقیقت میں اکثر وقت یہی ہے اور یہی وجہ ہے کہ شیطان کی سب سے بڑی حکمت یہ ہے کہ شیطان کے وجود کو کہ ہم اس کو برائی کا ذمہ دار ٹھہراتے ہیں نہ کہ بنی نوع انسان اور یقیناً شیطان کے ان حربوں کا جو حقیقت میں ہمارے موجودہ حالات میں دکھایا گیا ہے۔

دنیا آج عالمی حالات پر نظر دوڑائے ملکی حالات پر نظر ڈالیں شیطان کے سب سے مہلک ہتھکنڈے امت مسلمہ کو ٹکڑے ٹکڑے کرنا اور ان میں تفرقہ ڈالنا ہے شیطان ان کو توڑنے کا سبب بنتا ہے شیطان تفرقہ کا باعث بنتا ہے ہمارے نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا کہ اتحاد اللہ کی طرف سے ہے۔ شیطان کی طرف سے ہے وہ دلوں کو جوڑتا ہے اتحاد اللہ کی طرف سے ہے اور یہ شیطان ہی ہے جو لوگوں کو توڑتا ہے اور یہ اس کا سب سے خطرناک حربہ ہے کیونکہ جیسا کہ ہمارے نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا

کہ بھیڑیا صرف اکیلی بکریوں پر حملہ کرتا ہے اور جب بھیڑوں کا ایک گروہ ہوتا ہے تو بھیڑیا ہوتا ہے۔ اپنے آپ کو شیطان سے بچانے کے اہم ترین طریقے یہ ہیں کہ ہم اپنے دلوں میں اخلاص پیدا کریں تاکہ اپنے آپ کو شیطان سے بچانے کا واحد سب سے مؤثر ذریعہ اخلاص ہے اور ہم مسلسل عبادات کرتے ہوئے اخلاص پیدا کرتے ہیں۔ انسانوں کی نظروں سے اور اللہ کے سوا کوئی نہیں دیکھتا اخلاص پیدا ہوتا ہے اور قرآن میں شیطان خود کہتا ہے کہ میں ان سب کو گمراہ کرنے والا ہوں سوائے تیرے ان بندوں کے جن کے پاس اسلامیات ہیں۔

Spread the love

اپنا تبصرہ بھیجیں